18

عائشہ احد تشدد کیس: حمزہ شہباز پر مقدمہ درج ہونے کے بعد چیف جسٹس ثاقب نثار نے عائشہ احد کی دلی خواہش پوری کر دی

لاہور (انر پاکستان آن لائن) چیف جسٹس پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار کے حکم پر عائشہ احد کو سکیورٹی فراہم کردی گئی۔ بتایا گیا ہے کہ ایک اے ایس آئی اور چار کانسٹیبل عائشہ کے ساتھ حفاظتی ڈیوٹی پر تعینات رہیں گے۔ یاد رہے کہ چیف جسٹس نے ہفتہ کے روز سماعت کرتے ہوئے آئی جی پنجاب کو درخواستگزار

عائشہ احد ملک کو فول پروف سکیورٹی مہیا کرنے کی ہدایت کی تھی جبکہ عائشہ احد ملک کی درخواست پر ہفتہ اور اتوار کی درمیانی شب (ن) لیگ کے مرکزی رہنما حمزہ شہباز سمیت چھ افراد کے خلاف تھانہ اسلامپورہ میں تشدد اور ہراساں کرنے سمیت دیگر دفعات کے تحت مقدمہ درج کیا گیا ۔ واضح رہے کہ اس سےقبل سپریم کورٹ آف پاکستان نے مسلم لیگ (ن) کے رکن قومی اسمبلی حمزہ شہباز کی مبینہ اہلیہ عائشہ احد پر تشدد کے الزام میں شوہر حمزہ شہبازاور دیگر ملزموں کیخلاف اندراج مقدمہ اور آئی جی پنجاب کوعائشہ احدکوتحفظ فراہم کرنے کاحکم دےدیا جبکہ چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے عائشہ احدپرتشددسے متعلق عدالتی فیصلے پرعملدرآمد نہ کرنے پراظہاربرہمی کیا اوراستفسار کیا کہ سیشن کورٹ نے مقدمہ درج کرنے کاحکم دیاتھا،عملدرآمدکیوں نہیں ہوا؟چیک کریں کیاسیشن کورٹ کاآرڈرہائیکورٹ نے معطل کیاہے؟ سیشن کورٹ کاحکم معطل نہیں ہواتوآج ہی درخواست کے مطابق مقدمہ درج کریں‘ عدالت نے عائشہ احدکیخلاف کارروائی کاریکارڈ بھی6 جون تک پیش کرنے کاحکم دےدیا،عدالت نے کہا ہے کہ آگاہ کیاجائے آج تک مقدمہ درج نہ کرنے والے پولیس اہلکاروں میں کون کون شامل ہیں۔ہفتہ کو سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں چیف جسٹس ثاقب نثار کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے حمزہ شہباز کی بیوی ہونے کی دعویدارعائشہ احد کو

دھمکیاں ملنے کے معاملے کی سماعت کی۔ عائشہ احد نے مو¿قف اختیار کیا کہ اسے اور اس کی بیٹی کو حمزہ شہباز سے جان کا خطرہ ہے۔ چیف جسٹس نے حمزہ شہباز کو طلب کرتے ہوئے ایڈووکیٹ جنرل پنجاب کو ہدایت کی کہ وہ شہباز شریف کو فون کر کے حمزہ شہباز کی پیشی کو یقینی بنائیں۔کسی کی جان خطرہ میں نہیں دیکھ سکتے۔چیف جسٹس نے ریمارکس دیئے کہ آئی جی صاحب میرے حکم پر گھبرا کیوں جاتے ہیں، چیف جسٹس پاکستان نے کمرہ عدالت میں موجود خواجہ سلمان سے استفسار کیا کہ بتائیں حمزہ شہباز کہاں ہے۔ خواجہ سلمان نے بتایا کہ ان کے علم میں نہیں۔ چیف جسٹس نے کہا کہ سارا دن حمزہ کے ساتھ گھومتے ہیں اور کہتے ہیں کہ پتہ نہیں۔ حمزہ شہباز جہاں کہیں بھی ہوں پیش ہوں۔ ایڈووکیٹ جنرل پنجاب نے عدالت کو آگاہ کیا کہ حمزہشہباز بیرون ملک ہیں ، 3 سے 4 روز میں واپس پاکستان آ جائیں گے۔عدالت نے آئی جی پنجاب کو حکم دیا کہ عائشہ احد کو تحفظ فراہم کیا جائے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں