18

مصباح الحق نے اپنے کوچ کو خون کے آنسو رلا دیا ۔۔۔ کھیل کی دنیا سے آنے والی یہ خبر آپ کو دنگ کر دے گی

لاہور (انر پاکستان آن لائن) تفصیلات کے مطابق قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان مصباح الحق کے کوچ طاہر شاہ کینسر جیسے موذی مرض میں مبتلا ہوگئے ہیں مگر بیماری سے بڑھ کر انہیں دکھ یہ ہے کہ جنہیں انہوں نے سٹار کرکٹر بنایا آج وہ طاہر شاہ کے گھر کا راستہ بھول چکے ہیں انہوں نے نجی

ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے روتے ہوئے بتایا کہ جن لوگوں نے کرکٹ میں اتنا نام کمایا ہے جن کی میں کوچنگ کرتا رہا آج وہ لوگ میرا فون تک سننا گوارہ نہیں کرتے اوراپنے موبائل فون بند کردیتے ہیں ،انہوں نے بتایا کہ ان کوصرف 4100روپے پنشن ملتی ہے ۔طاہر شاہ کینسر جیسے موذی مرض میں مبتلا ہیں اور ان کا علاج جاری ہے، خراب مالی حالات کے باعث انہیں اپنے علاج میں شدید ترین دشواریوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے انہیں اس بات کا شکوہ ہے کہ ماضی میں جن لوگوں کی میں نے مدد کی اور ان کو سٹار بنایا آج جب میں انہیں فون کرتاہوں تو وہ لوگ میرا فون تک سننا گوارہ نہیں کرتے بلکہ اپنے موبائل ہی بند کردیتے ہیں۔ قومی ٹیم کے فاسٹ بولر محمد عباس نے آئی سی سی رینکنگ میں نمبر ون بولر بننے کی خواہشمند ہیں۔دوسری جانب دائیں ہاتھ کے تیز بولر محمد عباس نے لارڈز ٹیسٹ میں 64 رنز دے کر 8 کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا اور میچ کے بہترین کھلاڑی قرار پائے تھے۔وہ وسیم اکرم اور وقار یونس کے بعد لارڈز میں یہ اعزاز حاصل کر نے والے پاکستان کے تیسرے تیز بولر تھے، یہی نہیں اس کارکردگی کے بعد 28 سال کے فاسٹ بولر آئی سی سی ٹیسٹ ریکنکنگ میں ترقی پاکر اب 20 ویں نمبر پر آگئے ہیں۔

عباس سے ایک درجے اوپر 18 ویں پوزیشن پر یاسر شاہ ہیں جو ان فٹ ہونے کے باعث قومی ٹیم کے ہمراہ انگلینڈ نہیں آئے۔نجی نیوز کے پروگرام ’اسکور‘ میں گفتگو کرتے ہوئے محمد عباس نے آئی سی سی ٹیسٹ رینکنگ میں “نمبر ون” بولر بننے کی خواہش کا اظہار کیا۔ان کا کہنا تھا کہ گزشتہ سال جب انہوں نے ویسٹ انڈیز میں ٹیسٹ ڈیبیو کیا، تو سیریز کے اختتام پر وہ 64 ویں نمبر پر تھے لیکن ڈبلن میں آئر لینڈ کے خلاف ٹیسٹ میں اچھی کارکردگی پر ان کی رینکنگ 29ہو گئی تھی، جو اب مزید بہتری کے ساتھ 20ہے۔محمد عباس اس بات پر بھی خوش ہیں کہ انھیں کیریئر میں پہلی بار ٹیسٹ کے بہترین بولر ہونے کا موقع کرکٹ کے گھر لارڈز میں ملا۔یاد رہے کہ دائیں ہاتھ کے تیز بولر نے 7 ٹیسٹ میچوں میں اب تک 40 وکٹیں حاصل کی ہیں ،جو پہلے 7 ٹیسٹ کے دوران سب سے زیادہ وکٹیں حاصل کرنے کا پاکستان بولر کی جانب سے ایک نیا ریکارڈ بھی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں