35

نئے مالی سال کا وفاقی بجٹ کس تاریخ کو پیش کیا جائے گا؟ تاریخ کا اعلان ہو گیا

اسلام آباد (انر پاکستان آن لائن) وفاقی حکومت کی جانب سے الیکشن 2018 ء سے قبل وفاقی بجٹ 2018-19ء کی تیاریاں مکمل کر لیں گئی ہیں ،تفصیلات کے مطابق وفاقی بجٹ 27 اپریل کو قومی اسمبلی میں پیش کا جائے گا۔ وزارت خزانہ ذرائع کے مطابق آئندہ بجٹ کا کل حجم 5500 ارب روپے سے زیادہ رکھنے کی تجویز ہے

جس میں دفاع کے لئے رواں سال ک 920 ارب روپے کے مقابلے میں 1200 ارب روپے مختص کرنے کی تجویز ہے۔ دفاعی بجٹ میں رواں سال کے مقابلے میں دس فیصد اضافہ تجویز کیا گیا ہے۔ آئندہ مالی سال کے لئے وفاقی ترقیاتی بجٹ 800 ارب روپے، سول انتظامیہ کے جاری اخراجات کے لئے 448 ارب روپے مختص کرنے کی تجویز ہے آئندہ مالی سال کے لئے ریونیو وصولی کا ہدف 4435 ارب روپے مختص کرنے کی تجویز ہے ترقیاتی پروگرام کا حجم رواں سال کے مقابلے میں 201 ارب روپے کم رکھنے، قرضوں کی ادائیگی کیلئے 1607 ارب روپے مختص کرنے کی تجویز ہے قرضوں کی ادائیگی کیلئے کل بجٹ کا 29.3 فیصد مختص کیا جا را ہے سرکاری ملازمین کی تنخواہوں اور پنشن میں دس فیصد اضافہ کرنے کی تجویز کا امکان ہے بجٹ خسارہ 2029 ارب روپے مقرر کرنے کی تجویز ہے۔ آئندہ مالی سال کے دوران 2300 ارب روپے کے قرضے لئے جانے کی تجویز ہے۔ واضح رہے کہ وزارت خزانہ ذرائع کے مطابق آئندہ بجٹ کا کل حجم 5500 ارب روپے سے زیادہ رکھنے کی تجویز ہے جس میں دفاع کے لئے رواں سال ک 920 ارب روپے کے مقابلے میں 1200 ارب روپے مختص کرنے کی تجویز ہے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں